The World Federation One Stop Fiqh
Search
Menu

Ask an Alim

Miraas ke ahkam

Q:

اسلام علیکم!
سوال یہ ہے کہ ایک آدمی کی دو بیویاں ہے اور ایک بیوی کا انتقال اسکی زندگی میں ہی ہوچکاہے اوریہی اسکے بعد اس آدمی کا انتقال ہو جاتا ہے ۔ اسکے بعد اسکی جو جائیداد ہے وہ اس آدمی کی دونوں بیویوں کے
بچوں میں تقسیم ہوگی ۔اس میں سے دوسری بیوی کو حصہ مل سکے گا جو اس آدمی کے مرجانے کے بعد بھی ذندہ ہے ، کیا آسکا جائیداد میں حصہ ہوگا !؟ اگر ہوگا تو کیا جائداد تقسیم ہوتے بیچ میں دوسری بیوی کا انتقال ہو جائے ۔ تو کیا وہ حصہ جو اس دوسری بیوی کو ملنا تھا ؟ اسکے مرجانے کے بعد اس کے بچوں کو مل سکے گا ؟؟؟؟؟؟؟

A:

Wa alaykum salaam

Aapke sawal ka shukria.
Shauhar ke marjane ke baad unki jaaidaad me unke bachon ka aur zinda biwi ka hissa hai.
Aur agar biwi ka shauhar ke baad inteqaal hota hai to unka hissa unke apne bacchon ko milega.
Taqseeme jaaidaad hukme sharee ke tahat honi chahiye.

Miraas ke ahkam ke bare mey mazeed maloomaat ke liye, is link ko check karein:

https://www.sistani.org/urdu/book/61/3657/

Regards

Sukaina Taqawi